Mon. May 27th, 2019

فاطمہ علی کینسر سے جنگ ہار گئیں

پاکستان کی مشہور خاتون شیف فاطمہ علی کینسر کے خلاف زندگی کی جنگ ہار گئیں۔

Media player poster frame

سماجی رابطے ویب سائٹس پر فاطمہ علی کے انتقال کی خبر پر صارفین نے بڑی تعدد میں دکھ و افسوس کا اظہار کیا ہے۔

فاطمہ علی کو 2 سال قبل ہڈیوں کے کینسر کی تشخیص ہوئی تھی، جس کا انہوں نے بہت بہادری سے مقابلہ کیا اور اسے شکست دے دی لیکن گزشتہ برس انہیں ایک بار پھر کینسر کی تشخیص ہوئی۔

ڈاکٹرز نے دوسری بار کینسر کی آمد کی خبر کے ساتھ باہمت فاطمہ پر ایک سال کی زندگی کی مہلت کا کہہ کر بم گرا دیا۔

فاطمہ علی نے اس خبر اور مہلت کی بات کو بہادی سے سنا اور اپنی باقی زندگی بھرپور انداز سے گزارنے کی ٹھانی، وہ کئی شوز میں شرکت کرنے لگیں۔

فاطمہ علی نے 18 سال کی عمر میں اپنا شیف بننے کا خواب پورا کرنے کیلئے نیویارک کا رخ کیا اور کھانے بنانے کی تربیت دینے والے بین الاقوامی شہرت یافتہ انسٹیٹیوٹ سے تربیت حاصل کی۔

فاطمہ نے کھانا بنانے کے مختلف مقابلوں میں حصہ لیا اور وہ فوڈ نیٹ ورک کا ٹی وی شو ’چوپڈ‘ جیتنے والی پہلی پاکستانی خاتون تھیں۔

لیکن آج یہ باہمت و بہادر فاطمہ علی کینسر سے جنگ ہار کر دارفانی سے کوچ کرگئی ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *